جی این این سوشل

تجارت

خیبر پختونخوا کا 1754 ارب روپے کا بجٹ صوبائی اسمبلی میں پیش

بجٹ میں کم سے کم ماہانہ اجرت 32 ہزار سے 36 ہزار کرنے کی تجویز دی گئی ہے

پر شائع ہوا

کی طرف سے

خیبر پختونخوا کا 1754 ارب روپے کا بجٹ صوبائی اسمبلی میں پیش
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

 

مالی سال 2024-25ء کیلئے 1754ارب  روپے حجم کا بجٹ جمعہ کو خیبرپختونخوا میں پشاور کی صوبائی اسمبلی میں پیش کیا گیا۔

بجٹ میں کم سے کم ماہانہ اجرت 32 ہزار سے 36 ہزار کرنے کی تجویز دی گئی ہے، تعلیم کے لیے 362ارب روپے، صحت کےلیے 232 ارب روپے جبکہ صحت کارڈ کےلیے 34ارب روپےمختص کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔

وزیر خزانہ خیبر پختونخوا آفتاب عالم نے بجٹ تقریر کے دوران کہا کہ کل محصولات 1754 ارب روپے اور کل اخراجات 1654 ارب روپے ہیں، بجٹ 100 ارب روپے سرپلس ہے۔

آفتاب عالم نے بتایا کہ  بجٹ میں عوامی خدمات کی فراہمی پر توجہ مرکوز کی، بجٹ میں صنعتی شعبے کے افراد کی مشاورت بھی شامل کی، صوبائی بجٹ میں آمدن کے دو حصہ ہیں، ایک صوبہ کے اپنے محاصل اور دوسرا وفاق سے ملنے والے فنڈز ہیں، وفاق کے ذمے مختلف مد میں بقایاجات واجب الادا ہیں، ضم اضلاع کے سالانہ 262 ارب روپے وفاق سے ملنے ہیں ، جو نہیں مل رہے۔

جرم

کالعدم ٹی ٹی پی کا اہم سرغنہ افغانستان میں ہلاک

دہشتگرد عبدالمنان ٹی ٹی پی لیڈر عظمت اللہ محسود کا دست راست تھا، عبدالمنان باجوڑ میں دہشتگرد کارروائیوں کی منصوبہ بندی میں کلیدی کردار ادا کرتا تھا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

کالعدم ٹی ٹی پی کا اہم سرغنہ افغانستان میں ہلاک

کالعدم ٹی ٹی پی کا اہم سرغنہ افغانستان کے علاقے کنڑ میں ہلاک ہو گیا۔

ذرائع کے مطابق ہلاک دہشتگرد عبدالمنان باجوڑ میں ٹارگٹ کلنگ، بارودی سرنگ کے دھماکوں میں ملوث تھا، اس کے علاوہ ہلاک دہشتگرد چیک پوسٹوں پر فائرنگ اور بھتہ خوری سمیت دیگر سرگرمیوں میں بھی ملوث تھا۔

کالعدم ٹی ٹی پی شوریٰ ملاکنڈ کا رکن عبدالمنان عرف حکیم اللہ افغانستان کے ضلع اسد آباد میں ہلاک ہوا، عبدالمنان کو نامعلوم افراد نے فائرنگ کر کے ہلاک کیا۔ دہشتگرد عبدالمنان ٹی ٹی پی لیڈر عظمت اللہ محسود کا دست راست تھا، عبدالمنان باجوڑ میں دہشتگرد کارروائیوں کی منصوبہ بندی میں کلیدی کردار ادا کرتا تھا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ دہشتگرد عبدالمنان نے 2007 میں ٹی ٹی پی میں شمولیت اختیار کی تھی، عبدالمنان نے سکیورٹی فورسز اور معصوم شہریوں کے خلاف متعددکارروائیوں میں حصہ لیا، دہشتگرد عبدالمنان کے بھائی طارق عرف اسد کا تعلق بھی کالعدم ٹی ٹی پی سے ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

ایام تشریق کا اختتام، 20 جون سے حجاج کرام کی واپسی شروع

مناسک حج کی ادائیگی کے آخری دن بیشتر حجاج کرام تینوں جمرات کی رمی کے بعد منیٰ سے رخصت ہو کر مکہ مکرمہ پہنچنے لگے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ایام تشریق کا اختتام، 20 جون سے حجاج کرام کی واپسی شروع

ایام تشریق کا اختتام ہوگیا جس کے بعد حجاج کرام کی واپسی 20 جون سے ہونا شروع ہو جائے گی۔

مناسک حج کی ادائیگی کے آخری دن بیشتر حجاج کرام تینوں جمرات کی رمی کے بعد منیٰ سے رخصت ہو کر مکہ مکرمہ پہنچنے لگے ہیں۔

مقامی حجاج نے جدہ، مکہ مکرمہ، طائف، مدینہ منورہ، ریاض اور دیگر شہروں کی طرف روانگی شروع کردی۔

منیٰ سے مکہ مکرمہ اپنی رہائش گاہ واپسی کے بعد حجاج اب مدینہ منورہ جائیں گے، مسجد نبوی میں نمازیں ادا کریں گے اور روضہ رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم پر حاضری دیں گے۔

حجاج مسجد قباء، مسجد قبلتیں، سباء مساجد اور مقدس مقامات کی زیارت بھی کریں گے، تقریباً 20 فیصد حجاج منیٰ میں قیام کریں گے اور رمی کے بعد اپنی رہائش گاہوں کی جانب روانہ ہوں گے۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

بھارتی ایجنسی ’’را‘‘ کے مزید 4 جاسوس آسٹریلیا سے بے دخل

کینیڈ اور امریکہ میں بھی بھارت کی جاسوسی سرگرمیاں بے نقاب ہوچکی ہیں، رپورٹ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بھارتی ایجنسی ’’را‘‘ کے مزید 4 جاسوس آسٹریلیا سے بے دخل

آسٹریلیا نے بھارت کے مزید 4 جاسوسوں کو اپنے ملک سے بے دخل کر دیا ہے۔ جاسوسوں کی تازہ بے دخلی کو آسٹریلیا میں بھی مودی سرکار کے لیے زبردست دھچکا قرار دیا جارہا ہے۔کینیڈ اور امریکہ میں بھی بھارت کی جاسوسی سرگرمیاں بے نقاب ہوچکی ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی خفیہ ادارے ’’راـ ‘‘کی طرف سے جاسوسی کا نیٹ ورک قائم کرنے کا بنیادی مقصد بیرونِ ملک مقیم بھارتی باشندوں پر نظر رکھنا اور اختلافِ رائے کو دھمکانا تھا۔آسٹریلوی قانون سازوں پر اثر انداز ہونے کے لیے جاسوسوں کا نیٹ ورک بنایا جارہا تھا۔

آسٹریلین براڈ کاسٹنگ کارپوریشن نے تحقیقات کے نتیجے میں بتایا ہے کہ بے دخل کیے گئے جاسوس آسٹریلوی سیاست دانوں اور دفاعی ٹیکنالوجیز سے وابستہ افراد اور اداروں کو نشانہ بنا رہے تھے۔

تاہم ان جاسوسوں کو حکام نے ملک سے بہت خاموشی کے ساتھ نکالا ہے تاکہ مودی سرکار کے لیے سُبکی اور شرمندگی کا سامان نہ ہو لیکن عوامی سطح پر جاسوسی کی مذمت نہ کیے جانے پر آسٹریلیا کے اندر سے آوازیں اٹھ رہی ہیں۔

گرینز پارٹی کے سینیٹر شوبرج نے مطالبہ کیا ہے کہ آسٹریلیا سرعام بھارت کی مذمت کرے۔

آسٹریلوی حکام نے بتایا ہے کہ بھارتی جاسوس نیٹ ورک ایئر پورٹ سکیورٹی پروٹوکولز کو بھی نشانہ بنارہا تھا۔

یاد رہے کہ 2021 میں انٹیلی جنس چیف مائک برجس نیٹ ورک کا پتا لگایا تھا اور سفارت کاروں کے بھیس میں کام کرنے والے جاسوسوں کو بے نقاب کیا گیا تھا۔ انہوں نے بھارت کا نام نہیں لیا تھا۔ نام نہاد سفارت کاروں کو خاموشی سے، پروفیشنل طریقے سے ملک بدر کیا گیا تھا۔

خیال رہے کہ اپریل میں دو جاسوس نکالے گئے تھے۔ چار جاسوسوں کی بے دخلی کا انکشاف آسٹریلین براڈ کاسٹنگ کارپوریشن نے اپنی تحقیقات میں کیا۔ آسٹریلیا میں بھارتی نیٹ ورک بے نقاب ہونے کی اولین خبریں اپریل میں آئی تھیں جب واشنگٹن پوسٹ نے بتایا تھا کہ دو بھارتی جاسوس نکال دیئے گئے ہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll