جی این این سوشل

علاقائی

خیبرپختونخوامیں شہید ہونے والے اہلکاروں کی نمازجنازہ اداکردی گئی

آئی ایس پی آرکاکہناہےکہ آرمی چیف جنرل سید عاصم منیر، این آئی ایم، فوجی اور سول حکام کی بڑی تعداد نے نماز جنازہ میں شرکت کی

پر شائع ہوا

کی طرف سے

خیبرپختونخوامیں  شہید ہونے والے اہلکاروں کی نمازجنازہ اداکردی گئی
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

خیبرپختونخوامیں دہشتگر دوں سےمقابلےمیں شہیداہلکاروں کی نمازجنازہ اداکردی گئی۔
پاک فوج کےشعبہ تعلقات عامہ(آئی ایس پی آر)کےمطابق سپاہی تیمور شہید،سپاہی نادر صغیر شہید ، سپاہی محمد یاسین شہید، لانس نائیک سید دانش کی نماز جنازہ اداکردی گئی،جبکہ افکار شہید اور نائیک اشفاق بٹ شہید، جنہوں نے جنرل ایریا باغ ضلع خیبر میں دہشت گردوں کے ساتھ شدید فائرنگ کے تبادلے کے دوران شہادت قبول کی ان کو پشاور گیریژن میں سپرد خاک کیا گیا۔

آئی ایس پی آرکاکہناہےکہ آرمی چیف جنرل سید عاصم منیر، این آئی ایم، فوجی اور سول حکام کی بڑی تعداد نے نماز جنازہ میں شرکت کی۔ 
بعد ازاں چیف آف آرمی سٹاف جنرل سیدعاصم منیر نے آپریشن کے دوران زخمی ہونے والے فوجیوں کی خیریت دریافت کرنے کے لیے سی ایم ایچ پشاور کا دورہ کیا۔
چیف آف آرمی سٹاف جنرل عاصم منیرنے ان کے بلند حوصلے کو سراہا اور پوری قوت اور جذبے کے ساتھ دہشت گردی کا مقابلہ کرنے کے قوم کے عزم کا اعادہ کیا۔ شہدا کو پورے فوجی اعزاز کے ساتھ ان کے آبائی علاقوں میں سپرد خاک کیا جائے گا۔ قبل ازیں آمد پر کور کمانڈر پشاور نے آرمی چیف کا استقبال کیا۔    

پاکستان

اس حکومت میں صرف ٹیکسوں کی بھر مار ہے ، حافظ نعیم الرحمٰن

حا فظ نعیم الرحمان نے کہا کہ دفعہ 144 لگا کرعوام کا احتجاج نہیں روکا جا سکتا، دفعہ 144 کے نفاذ سے کب تک عوام کی آواز دبائیں گے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اس حکومت میں صرف    ٹیکسوں کی بھر مار ہے ، حافظ نعیم الرحمٰن

لاہور: امیر جماعت اسلامی حافظ نعیم الرحمان کا کہنا ہے کہ ملک میں ٹیکسوں کی بھرمار ہے اور بجلی کے بم گر رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق جماعت اسلامی کے امیر حافظ نعیم الرحمان نے لاہور میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہماری جماعت نے احتجاجی تحریک شروع کر دی ہے۔

انہوں نے کہا کہ دفعہ 144 لگا کرعوام کا احتجاج نہیں روکا جا سکتا، دفعہ 144 کے نفاذ سے کب تک عوام کی آواز دبائیں گے۔

امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ بد ترین لوڈشیڈنگ کی وجہ سے عوام کو مشکلات کا سامنا ہے، مختلف شہروں میں ناجائز ٹیکسز کیخلاف احتجاج کیا گیا ہے۔

ساہیوال واقعہ کی تحقیقات ہونی چاہئے، کہتے ہیں پنجاب میں ہم نے بڑا کام کیا ہے۔

جماعت اسلامی کے امیر حافظ نعیم الرحمن کا مزید کہنا تھا کہ آپ دیہاڑی پر ڈاکٹرز کو رکھ رہےہیں، آئی ایم ایف کی غلامی کو تسلیم کرلیا جاتا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

غزہ میں گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران اسرائیلی حملوں میں 56 فلسطینی شہید

گزشتہ سال 7 اکتوبر سے غزہ میں جاری اسرائیلی جنگ کے نتیجے میں 37 ہزار سے زائد فلسطینی شہید اور85 ہزار سے زائد زخمی ہوگئے ہیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

غزہ میں گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران اسرائیلی حملوں میں 56 فلسطینی شہید

غزہ میں گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران اسرائیلی حملوں میں کم ازکم 56 فلسطینی شہید ہوگئے ہیں۔

گزشتہ سال 7 اکتوبر سے غزہ میں جاری اسرائیلی جنگ کے نتیجے میں 37 ہزار سے زائد فلسطینی شہید اور85 ہزار سے زائد زخمی ہوگئے ہیں ۔ 

واضح رہے ک غزہ کی پٹی پر اسرائیل کے حملوں میں شہید ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد 37  ہزار 552 ہو گئی۔

پڑھنا جاری رکھیں

جرم

عدالتیں مذہبی اقلیتوں اور معاشرے کے دیگر کمزور طبقات کے تحفظ کو یقینی بنائیں، وزیر قانون

وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ کی طرف سے پیش کی گئی قرارداد میں کہا گیا کہ یہ ایوان اس بات پر یقین رکھتا ہے کہ زندگی کا حق سب سے زیادہ عزیز حق ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

عدالتیں مذہبی اقلیتوں اور معاشرے کے دیگر کمزور طبقات کے تحفظ کو یقینی بنائیں، وزیر قانون

اسلام آباد: قومی اسمبلی نے اتوار کو ملک کے مختلف حصوں میں موب لنچنگ کے ہولناک اور المناک واقعات کی شدید مذمت کرتے ہوئے قرارداد منظور کرلی۔

وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ کی طرف سے پیش کی گئی قرارداد میں کہا گیا کہ یہ ایوان اس بات پر یقین رکھتا ہے کہ زندگی کا حق سب سے زیادہ عزیز حق ہے جیسا کہ پاکستان کے آئین میں درج ہے۔  انہوں  نے کہا کہ ہر شخص کے ساتھ قانون کے مطابق نمٹا جائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ ایوان سوات اور سرگودھا میں جرائم کے الزام میں ہمارے شہریوں کی حالیہ ہجومی تشدد کا نوٹس لیتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ بات انتہائی تشویش ناک  ہے کہ حال ہی میں ملک کے مختلف حصوں میں ایسے واقعات میں اضافہ ہوا ہے جسے کسی بھی مہذب معاشرے میں برداشت نہیں کیا جا سکتا۔

 ایوان نے وفاقی اور صوبائی حکومتوں پر زور دیا کہ وہ تمام شہریوں بشمول مذہبی اقلیتوں اور معاشرے کے دیگر کمزور طبقات کے تحفظ کو یقینی بنائیں۔

ایوان نے یہ بھی مطالبہ کیا کہ خیبرپختونخوا اور پنجاب کی صوبائی حکومتیں ان واقعات میں ملوث افراد کی شناخت، تفتیش اور متعلقہ قوانین کے تحت ان کے خلاف کارروائی کو یقینی بنانے کے لیے فوری طور پر تمام ضروری اقدامات کریں۔

قرارداد میں اس توقع کا اظہار کیا گیا کہ عدالتیں ان مقدمات میں فوری اور جلد انصاف کو یقینی بنائیں گی۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll