جی این این سوشل

علاقائی

چترال سے زخمی حالت میں پکڑا جانیوالا برفانی چیتا علاج کیلئے پشاور منتقل

چترال : چترال کے وادی ارکاری سے زخمی حالت میں پکڑا جانیوالا برفانی چیتا کو پشاور منتقل کردیا گیا۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

چترال سے زخمی حالت میں پکڑا جانیوالا  برفانی چیتا علاج کیلئے پشاور منتقل
چترال سے زخمی حالت میں پکڑا جانیوالا برفانی چیتا علاج کیلئے پشاور منتقل

رپورٹ : فہیم اختر

چترال کے وادی ارکاری میں زخمی حالت میں پکڑے گئے نایاب جانور برفانی چیتا کومزید علاج کے لئے پشاور منتقل کردیا گیا ہے۔گزشتہ دنوں چترال کے وادی ارکاری کے گاں رباط میں مقامی نوجوانوں نے ایک زخمی برفانی چیتے کو اس وقت پکڑ لیا تھا جب وہ پہاڑی سے گاں کے قریبی جنگل میں گر گیا ۔ مقامی شخص نے برفانی چیتے کو زخمی حالت میں چلتا دیکھا اور اسے فوراً پکڑ کر اپنے گھر لے گیا اور ابتدائی علاج سمیت مناسب انتظامات کا بندوبست کیا اور محکمہ جنگلی حیات کے اہلکاروں کو زخمی برفانی چیتے سے متعلق اطلاع کردی۔ جس کے بعد مقامی کمیٹی برائے تحفظ اور متعلقہ محکمہ متحرک ہوگیا اور برفانی چیتے کو اپنی تحویل میں لیکر طبی امداد کا آغاز کردیا ہے۔

چترال میں برفانی چیتے کے تحفظ کے لئے کام کرنے والی غیر سرکاری تنظیم سنو لیپرڈ فانڈیشن کے علاقائی پراجیکٹ منیجر شفیق اللہ خان نے زخمی برفانی چیتے کے حوالے سے مقامی میڈیا کو بتایا ہے کہ برفانی چیتے کا پچھلا دھڑا زخمی ہے اور گہری چوٹیں آئی ہیں جس کی وجہ سے وہ مفلوج ہوگیا ہے جس سے یہی اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ برفانی چیتا کافی اونچائی سے نیچے گر گیا ہے اور ممکن ہے کہ یہ کسی شکار کا پیچھا کررہا تھا۔

یہ واقعہ چترال کے وادی ارکاری کے گاں رباط میں ہفتے کی صبح پیش آیا ہے۔جہاں پر مقامی افراد نے ابتدائی ریسکیو کرکے محکمہ جنگلی حیات کا اطلاع کردی۔ چترال کے دورافتادہ اور پہاڑوں سے گھرے گاں تک پہنچنے میں محکمہ جنگلی حیات کا عملہ شام تک وہاں پہنچ گیا اور اپنی حفاظتی تحویل میں لیکر ویٹرنری ہسپتال پہنچادیا ۔ طبی عملے کے مطابق برفانی چیتا کئی فٹ اونچائی سے گر گیا ہے جس کی وجہ سے ریڑھ کی ہڈی پہ چوٹیں آئی ہیں۔زخمی ہونے کی وجہ سے برفانی چیتا چلنے پھرنے سے قاصر ہے ۔

ویٹرنری ہسپتال چترال میں سینئر ویٹرنری آفیسر ڈاکٹر شیخ احمد کے مطابق برفانی چیتے کی عمر 4سال ہے اور جنس کے لحاظ سے مادہ ہے۔ زخمی ہونے کی وجہ سے برفانی چیتے کے پچھلے دھڑے سے بال بھی اکھڑگئے ہیں ۔ ویٹرنری ہسپتال چترال میں ابتدائی ایگزامنیشن کے بعد زخمی برفانی چیتے کو مزید طبی سہولیات کے لئے پشاور منتقل کردیا گیا ہے ۔

ضلعی انتظامیہ نے برفانی چیتے کو بروقت بچانے پر جنگلی حیات اور مقامی رضاکاروں کو شاباشی دیتے ہوئے بتایا ہے کہ نایاب جانوروں کے تحفظ اور بقاءکے لئے ہم سب کو اسی طرح مل کر کام کرنا ہوگا۔ انہوں نے اس امر کی بھی تصدیق کردی کہ زخمی برفانی چیتے کو مزید علاج معالجے کے لئے پشاور منتقل کردیا گیا ہے جس کی تجویز چترال کے ماہرحیوانات نے دی تھی۔

برفانی چیتے کا تعلق جانوروں کے اس گروہ سے ہے جو بلندی پر رہتے ہیں اور منفی درجہ حرارت پر بسیرا کرتے ہیں ۔ برف سے ڈھکی چوٹیوں پر یہ شکار کے زریعے اپنے خوراک کا بندوبست کرتے ہیں۔ بعض اوقات خوراک کی قلت کے باعث یہ جانور آبادی کی طرف بڑھتا ہے اور مال مویشی پر حملہ آور ہوتا ہے۔ خیبرپختونخواہ کا ضلع چترال اور انتظامی صوبہ گلگت بلتستان کو برفانی چیتے کا مسکن قرار دیا جاتا ہے جہاں پر یہ نایاب اور قیمتی جانور برفیلے چوٹیوں پر اپنا گزراوقات کرتا ہے۔یہی وجہ ہے کہ ان علاقوں میں اکثر اوقات لوگ برفانی چیتے کا نظارہ اپنی آنکھوں سے کرتے ہیں جبکہ بعض غیر سرکاری تنظیموں نے بالائی علاقوں اور چوٹیوں پر خفیہ کیمرے بھی نصب کردئے ہیں جن کے زریعے ان کی حرکات کو محفوظ کیا جاتا ہے۔

ایک تحقیق کے مطابق چترال میں برفانی چیتے کی تعداد صرف 36ریکارڈ کی گئی ہے جس سے یہ واضح ہوتا ہے کہ برفانی چیتا انتہائی نایاب جانوروں میں شامل ہوتا ہے اور اس کے تحفظ اور بقاءکے لئے مزید اقدامات اٹھانے کی ضرورت ہے۔

نایاب جانوروں کے تحفظ کے لئے کام کرنے والی تنظیموں نے اہلیان چترال کی جانب سے برفانی چیتے کو تحفظ دینے کے عمل کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ اس عمل کے زریعے اہلیان چترال نے ثابت کردیا کہ ان کے ہاں نایاب اور قیمتی جانوروں سے متعلق شعور وآگاہی پائی جاتی ہے اور ان جانوروں کے تحفظ کے لئے کام کرتے ہیں۔

ادھر چترال سے تعلق رکھنے والے مقامی جوانوں نے مطالبہ کیا ہے کہ برفانی چیتے کو مکمل علاج کے بعد دوبارہ اس کے قدرتی مسکن یعنی چترال کے گاں رباط میں چھوڑ دیا جائے اور اسے کسی چڑیا گھر کے پنجرے کی نذر نہ کیا جائے۔

صحت

وزیر اعلی پنجاب نے خسرے کے باعث بچوں کی ہلاکت کا نوٹس لے لیا

 وزیر اعلیٰ پنجاب مریم نواز شریف نے صوبے میں خسرے سمیت وبائی امراض کی سخت نگرانی اور روک تھام کی ہدایت کی ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

وزیر اعلی پنجاب نے خسرے  کے باعث بچوں کی ہلاکت کا نوٹس لے لیا

لاہور : وزیر اعلی پنجاب مریم نواز شریف نے صوبے میں خسرے سمیت وبائی امراض کی سخت نگرانی اور روک تھام کی ہدایت کی ہے ۔

 وزیر اعلیٰ پنجاب مریم نواز شریف نے صوبے میں خسرے سمیت وبائی امراض کی سخت نگرانی اور روک تھام کی ہدایت کی ہے۔

انہوں نے پتوکی میں خسرے کے باعث بچوں کی اموات کا نوٹس لیتے ہوئے سیکرٹری صحت کو واقعے کی فوری رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی۔

انہوں نے کہا کہ خسرے سے متاثرہ بچوں کو بہترین طبی سہولیات فراہم کی جائیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

سپریم کورٹ رجسٹرار کابرطانوی ہائی کمیشن کے نام اہم خط

رجسٹرارسپریم کورٹ نے خط میں لکھا کہ خط میں1953میں ایرانی حکومت کاتختہ الٹنےکاذکرکیاگیا ہے، خط میں بالفوراعلامیہ کے ذریعےاسرائیلی ریاست کے قیام کا تذکرہ بھی کیا گیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سپریم کورٹ رجسٹرار کابرطانوی ہائی کمیشن کے نام اہم خط

برطانوی ہائی کمیشن کو خط رجسٹرارسپریم کورٹ نے چیف جسٹس آف پاکستان کے حکم پرلکھا۔

تفصیلات کے مطابق خط کے متن کے مطابق ہائی کمشنرنےعاصمہ جہانگیرکانفرنس میں جمہوریت، کھلےمعاشرے کی بات کی، سپریم کورٹ آف پاکستان نے غلطیوں کاازالہ کیا ہے، ضرورت اس امرکی ہے کہ برطانیہ بھی غلطیوں کاازالہ کرے۔

رجسٹرارسپریم کورٹ نے خط میں لکھا کہ خط میں1953میں ایرانی حکومت کاتختہ الٹنےکاذکرکیاگیا ہے، خط میں بالفوراعلامیہ کے ذریعےاسرائیلی ریاست کے قیام کا تذکرہ بھی کیا گیا۔

رجسٹرارنے خط پاکستان میں برطانیہ کے ہائی کمشنرجین میریٹ کےنام بھجوایا جس میں کہا گیا کہ عاصہ جہانگیرکانفرنس میں آپکی تقریرمیں جمہوریت کی اہمیت کواجاگرکیا گیا۔ آپ کی تقریرمیں انتخابات اورکھلے معاشرےکی اہمیت کواجاگرکیاگیا۔

خط کے متن کے مطابق برطانوی حکومت کی طرف سے دکھائی جانے والی دلچسپی خوش آئند ہے، انتخابات بروقت نہیں ہوسکے تھے کیونکہ صدر، الیکشن کمیشن متفق نہیں تھے، پاکستان میں اسمبلیوں کی مدت پوری ہونے کے 90 دن کےاندرانتخابات ضروری تھے ، خط میں لکھا گیا کہ صدر، ای سی متفق نہیں تھے الیکشن کی تاریخ کا اعلان کرنے کا اختیارکس کو ہے، سپریم کورٹ نے یہ معاملہ صرف 12 دن میں حل کردیا، 8 فروری2024کوپورے پاکستان میں عام انتخابات ہوئے۔ الیکشن لڑنےکے خواہشمندبہت لوگوں کو تاحیات  پابندی کاسامناکرناپڑتاتھا۔

خط یہ بھی کہا گیا کہ سپریم کورٹ کی طرف سےانہیں ایماندار’’صادق وامین‘‘ نہیں سمجھاجاتاتھا، بنچ نے پہلے کے فیصلے کوکالعدم قراردیتے ہوئے کہا یہ آئین وقانون کےمطابق نہیں۔ انٹراپارٹی الیکشن آمریت روکنے، سیاسی جماعتوں میں جمہوریت کی ضرورت ہے۔

رجسٹراسپریم کورٹ کی جانب سے خط میں لکھا گیا کہ جمہوری اصول کی تعمیل کویقینی بنانےکےلیےقانون میں شرط رکھی گئی ہے، انٹراپارٹی الیکشن نہیں کراتی تو پارٹی انتخابی نشان کیلئے اہل نہیں ہوگی۔ ایک جماعت نے خود قانون کےلیے ووٹ دیا اس نے انٹرا پارٹی الیکشن نہیں کرائےتھے۔

چیف جسٹس آف پاکستان کی جانب سے خط میں یہ بھی کہا گیا کہ سپریم کورٹ نےاس بات کااعادہ کیاقانون نےکیاکہاہے، اس فیصلے کے حوالے سے آپ کی تنقید بلاجوازتھی، موجودہ چیف جسٹس کےعہدہ سنبھالنے کے بعد مقدمات براہ راست نشر ہونے لگے۔

برطانوی ہائی کمشنر کو لکھے گئے خط کے متن کے مطابق پاکستان کی تاریخ میں پہلی بارعوامی اہمیت کےمقدمات براہ راست نشر ہونے لگے۔ چیف جسٹس قاضی فائزعیسیٰ نے مقدمات لائیو نشرکرنے کی اجازت دی، پاکستانی عوام سپریم کورٹ کی کارروائی کو مکمل طورپردیکھ سکتےہیں۔

خط کے متن میں مزید کہا گیا کہ مقدمات لائیو نشرکرنے سے عوام کوبھی شفافیت اورفیصلوں سے متعلق علم ہوگا، انٹراپارٹی الیکشن، پارٹی نشانات سے متعلق فیصلہ بھی براہ راست نشر کیا گیا بھی براہ راست نشرکیا گیا تھا۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

آذربائیجان کے وزیر خارجہ سرکاری دورے پر پاکستان پہنچ گئے

وزیر خارجہ جیہون بیراموف وزیر اعظم محمد شہباز شریف سے ملاقات کریں گے اور نائب وزیر اعظم و وزیر خارجہ سینیٹر محمد اسحاق ڈار سے تفصیلی بات چیت کریں گے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

آذربائیجان کے وزیر خارجہ سرکاری دورے پر پاکستان پہنچ گئے

اسلام آباد : آذربائیجان کے وزیر خارجہ جیہون بیراموف دو روزہ سرکاری دورے پر بدھ کو اسلام آباد پہنچ گئے۔ اسلام آباد انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر ایڈیشنل سیکرٹری خارجہ (افغانستان اور مغربی ایشیا) احمد نسیم وڑائچ نے ان کا پرتپاک استقبال کیا۔

وزیر خارجہ جیہون بیراموف وزیر اعظم محمد شہباز شریف سے ملاقات کریں گے اور نائب وزیر اعظم و وزیر خارجہ سینیٹر محمد اسحاق ڈار سے تفصیلی بات چیت کریں گے۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll