جی این این سوشل

دنیا

لیڈی ڈیانا کو دنیا سے رخصت ہوئے25 برس بیت گئے

نیویارک:   برطانوی شاہی خاندان کا حصہ بننے والی شہزادی ڈیانا کو دنیا سے رخصت ہوئے25برس بیت گئے ، برطانوی شہزادی آج بھی مداحوں کے دلوں میں زندہ  ہیں ۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

لیڈی ڈیانا کو دنیا سے رخصت ہوئے25 برس بیت گئے
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

لاکھوں کروڑوں  دلوں میں گھر کرنے والی  لیڈی ڈیانا یکم جولائی 1961 کو برطانیہ  کے شہر نارفورک میں پیدا ہوئیں ۔

پرنسس آف ویلز شہزادی ڈیانا29جولائی 1981 کو برطانیہ کے ولی عہد شہزادہ چارلس کے ساتھ رشتہ ازدواج میں منسلک ہوئیں ۔ ان کی شادی کی تقریب دنیا بھر میں کروڑوں لوگوں نے  براہ راست دیکھی لیکن بدقسمتی سے یہ شادی گیارہ سال ہی چل سکی ۔ ان کے دو بیٹے شہزادہ ولیم اور شہزادہ ہیری ہیں۔

ڈیانا کی عالمی سطح پر مقبولیت کا بڑا سبب ان کی خوبصورت شخصیت تھی اور طلاق کے بعد بھی ان کی مقبولیت میں کوئی کمی نہ آئی۔

ان کی مقبولیت کا اندازہ اس بات سے بھی لگایا جاسکتا ہے کہ دنیا میں سب سے زیادہ تصاویر لیڈی ڈیانا کی کھینچی گئیں۔ 

 شہزادی کو ہمیشہ سے ہی تعلیمی سرگرمیوں سے زیادہ فلاحی کاموں میں دلچسپی تھی ۔ برطانوی شاہی خاندان کا حصہ بننے والی شہزادی ڈیانا فیشن اور انسانی ہمدردی کی وجہ سے لوگوں میں بے حد مقبول ہوئیں۔

لیڈی ڈیانا پیرس میں 31 اگست 1997کو ایک کار حادثے میں  جاں بحق ہوگئیں۔ شہزادی ڈیانا کی آخری رسومات کی ادائیگی اور تدفین کے دوران ویسٹ منسٹر ایبے سے نارتھ ہیمشائر کے راستے میں ہزاروں افراد موجود تھے  ۔ دنیا بھر میں ان کی فلاحی  خدمات ہمیشہ یاد رکھی جائیں گی۔

جرم

اسامہ ستی قتل کیس: 2 اہلکاروںکو پھانسی، 3 کو عمر قید کی سزا

عدالت نے فیصلہ سنانے سے قبل تمام میڈیا نمائندگان اور غیر متعلقہ افراد کو باہر نکال دیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اسامہ ستی قتل کیس: 2 اہلکاروںکو پھانسی، 3 کو عمر قید کی سزا

اسلام آباد: ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد نے اسامہ ستی قتل کیس کے 2 اہکلاروں کو سزائے موت جبکہ 3 کو عمر قید کی سزا سنا دی۔

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد کی ایڈیشنل سیشن جج زیبا چودھری نے اسامہ ستی کیس کا محفوظ فیصلہ سنا دیا ہے۔
عدالت نے فیصلہ سنانے سے قبل تمام میڈیا نمائندگان اور غیر متعلقہ افراد کو باہر نکال دیا، ملزمان افتخار احمد، سعیداحمد، شکیل احمد اور محمد مصطفی کو ہتھکڑیوں میں عدالت پیش کیا گیا۔

عدالت نے ملزمان افتخار احمد اور محمد مصطفی کو سزائے موت جبکہ سعید احمد، شکیل احمد اور مدثر مختار کو عمر قید کی سزا سنائی۔

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد نے افتخار احمد اور محمد مصطفی پر ایک ایک لاکھ روپے جرمانہ بھی عائد کیا۔

پس منظر:

واضح رہےکہ اسامہ ستی کو  جنوری 2021 کو اسلام آباد میں سری نگر ہائے وے پر رات ڈیڑھ بجے اینٹی ٹیررازم اسکواڈ (اے ٹی ایس) کے اہلکاروں نے فائرنگ کرکے قتل کردیا تھا۔

ابتدائی طور پر پولیس نے واقعےکو ڈکیتی کا رنگ دیا تھا،بعد ازاں پانچ پولیس اہلکاروں کو حراست میں لے کر ان کے خلاف انسداد دہشت گردی اور قتل کی دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کی گئی تھی۔

پڑھنا جاری رکھیں

تفریح

راکھی ساونت اور عادل خان نے راہیں جُداکرلیں

بالی ووڈ کی معروف اداکارہ راکھی ساونت اور عادل خان کی راہیں جُداہوگئیں ، اداکارہ نے اس کی تصدیق کردی۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

راکھی ساونت اور عادل خان نے راہیں جُداکرلیں

تفصیلات کےمطابق راکھی ساونت نے بتایا  ان کے شوہر عادل خان درانی اور انہوں نے راہیں جدُا کر لی ہیں۔

بھارتی میڈیا کے مطابق حال ہی میں شادی کے بندھن میں بندھنے والی اداکارہ راکھی ساونت نے انکشاف کیا ہے کہ شوہر عادل خان نے ان سے علیحدگی کر لی ہے اور اب وہ عادل خان کے ساتھ نہیں ہیں۔

 سوشل میڈیا پر وائرل ویڈیو میں راکھی ساونت میڈیاکو بتا رہی ہیں کہ ان کے شوہر کسی اور لڑکی کے ساتھ تعلقات میں ہیں اور اس ہی لئے وہ مجھ سے الگ ہوگئے ہیں۔

یاد رہے کہ راکھی نے گزشتہ ماہ میڈیا پر اعلان کیا تھا کہ انہوں نے عادل خان درانی سے 7 ماہ پہلے شادی کر لی تھی تاہم اس کے کچھ دنوں بعد سے ہی ان دونوں کی علیحدگی کی افواہیں بھی پھیل گئی ہیں جن کی راکھی نے بھی تصدیق کر دی ہے۔
 

 
 
 
 
 
View this post on Instagram
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 

A post shared by India Forums (@indiaforums)

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

وزیراعظم شہباز شریف کا ترکیہ میں شدید زلزلے سے نقصانات پر رنج وغم کا اظہار

ترکیہ نے ہر مشکل میں ہمیشہ پاکستان کا ساتھ دیا ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

وزیراعظم شہباز شریف کا ترکیہ میں شدید زلزلے سے نقصانات پر رنج وغم کا اظہار

اسلام آباد: وزیراعظم محمد شہباز شریف نے ترکیہ میں شدید زلزلے سے ہونے والے نقصانات پر رنج وغم کا اظہارکیا ہے۔ پیرکواپنے تعزیتی بیان میں وزیراعظم شہباز شریف نے ترکیہ کی حکومت اور عوام سے قیمتی جانوں کے ضیاع پرتعزیت کا اظہارکرتے ہوئے متاثرہ خاندانوں سے ہمدردی کا اظہار کیا،وزیراعظم نے جاں بحق افراد کی مغفرت اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کیلئے دعا کی۔

انہوں نے کہا کہ پاکستانی حکومت اور عوام مشکل کی اس گھڑی میں برادر ملک ترکیہ کی حکومت اور عوام کے ساتھ ہیں۔ ترکیہ نے ہر مشکل میں ہمیشہ پاکستان کا ساتھ دیا ہے۔ پاکستان اپنے برادر ملک ترکیہ کے عوام اور حکومت کی ہر ممکن مدد کرے گا۔

وزیراعظم نے کہا کہ قدرتی آفات اور موسمیاتی تبدیلیوں سے تباہی کے بڑھتے واقعات پوری دنیا کے لئے خطرے کی گھنٹی ہے، یہ انسانیت اور کرہ ارض کی بقا کا معاملہ ہے۔وزیراعظم شہباز شریف نے کہا کہ قدرتی آفات اور موسمیاتی تبدیلیوں سے تباہی کسی ایک ملک یا خطے تک محدود نہیں رہی۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll