جی این این سوشل

تفریح

بھارتی کامیڈین راجو شری واستو انتقال کرگئے 

ممبئی : بھارتی کامیڈین و اداکار راجو شری واستو 58 سال کی عمر میں چل بسے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

بھارتی کامیڈین راجو شری واستو انتقال کرگئے 
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

بھارتی میڈیا کے مطابق راجو شری واستو کے اہلخانہ نے ان کے انتقال کی تصدیق کردی ہے۔

راجو شری واستو کو 10 اگست کو جِم میں ورزش کے دوران سینے میں درد کی تکلیف کی شکایت پر نیو دہلی کے اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا۔

رپورٹس کے مطابق راجو شری واستو کو علاج کے دوران وینٹی لیٹر پر بھی منتقل کیا گیا تھا۔

واضح رہے کہ راجو شری واستو کا شمار  بھارت  کے کامیاب اسٹینڈ اپ کامیڈینز میں ہوتا ہے ، وہ 1980 کی دہائی سے انٹرٹینمنٹ کی صنعت سے وابستہ ہیں۔

انہیں بین الاقوامی شناخت اسٹینڈ اپ کامیڈی شو ’دی گریٹ انڈین لافٹر چیلنج ‘ کے پہلے شو سے ملی، انہوں نے کئی فلموں میں کام کیا، راجو شری واستو فلم ڈیولپمنٹ اتھارٹی کونسل اترپردیش کے موجودہ چیئرمین بھی ہیں۔  وہ بگ باس سیزن تھری کا بھی حصہ رہے ہیں۔

پاکستان

چیئرمین پی ٹی آئی کی ہدایت پرالقادر ٹرسٹ ڈیڈ کو پبلک کرنے کا فیصلہ

القادر ٹرسٹ کو بھی شوکت خانم کی طرز پر چلایا جا رہا ہے، اس میں چیئرمین پی ٹی آئی کا کوئی کردارنہیں، وکیل انتظار پنجوتھا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

چیئرمین پی ٹی آئی کی ہدایت پرالقادر ٹرسٹ ڈیڈ کو پبلک کرنے کا فیصلہ

پی ٹی آئی کے وکیل انتظارپنجوتھا کا کہنا ہے کہ القادرٹرسٹ میں چیئرمین پی ٹی آئی کا کوئی کردارنہیں، عمران خان کی ہدایت پرالقادر ٹرسٹ ڈیڈ کو پبلک کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئےپی ٹی آئی وکیل کا کہنا تھا کہ القادر ٹرسٹ کو بھی شوکت خانم کی طرز پر چلایا جا رہا ہے، اس میں چیئرمین پی ٹی آئی کا کوئی کردارنہیں، چیئرمین پی ٹی آئی کی ہدایت پر القادر ٹرسٹ ڈیڈ کو پبلک کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

انتظارپنجوتھا نے کہا کہ القادرٹرسٹ کی زمین ذاتی فائدے کیلئے نہیں تھی، یہ ٹرسٹ دینی وسائسنی تعلیمات کیلئےقائم کیا گیا، یہ ادارے اس لئے ہیں کہ غریب افراد کو دینی و سائنسی تعلیمات ایک چھت تلے ملے، ٹرسٹ ڈیڈ میں واضح لکھا ہے کہ چیئرمین پی ٹی آئی یا ان کی اہلیہ کوئی مالی فائدہ نہیں لے سکتے، جھوٹے کیسز صرف اور صرف ساکھ کو نقصان پہنچانے کیلئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ٹرسٹ ڈیڈ کا کلاز 10 جس کے بارے میں سب کو معلوم ہونا چاہیے کہ ٹرسٹ سے عمران خان یا ان کی اہلیہ کسی بھی قسم کی تنخواہ یا دوسری مراعات حاصل نہیں کر سکتے،یہی وجہ سے کہ آج تک نیب کی تفتیش میں یہ بات ثابت نہیں ہوئی کہ عمران خان یا ان کی اہلیہ یا ان کے رشتہ داروں نے ٹرسٹ سے کسی قسم کاکوئی فائدہ لیا ہو۔

پی ٹی آئی کے وکیل انتظارپنجوتھا نے کہا کہ القادر ٹرسٹ کی بنیاد ذاتی فائدے کیلئے نہیں تھی، اس ٹرسٹ کے چیئرمین پی ٹی آئی اور بشریٰ بی بی دونوں ٹرسٹیز ہیں۔بشریٰ بی بی کا کردارصرف بطور ٹرسٹی کا ہے، القادر ٹرسٹ کو اس کا بورڈ چلاتا ہے، اس میں کسی کا کوئی عمل دخل نہیں ہے، ادارہ چلانے کیلئے جو بھی فیصلے ہوتے ہیں وہ بورڈ کرتا ہے۔

 

 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

لطیف کھوسہ نے مبینہ آڈیو لیک کی تصدیق کر دی ،کہا کہ آڈیو لیک کرنے والوں کو شرم آنی چاہیے

لطیف کھوسہ نےکہا کہ جسٹس بابر ستار نے بھی اس پر سوال اٹھایا کہ اس طرح کی آڈیو کالز کون لیک کرتاہے شرم آنی چاہیے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

لطیف کھوسہ نے مبینہ آڈیو لیک کی تصدیق کر دی ،کہا کہ آڈیو لیک کرنے والوں کو شرم آنی چاہیے

اسلام آباد: لطیف کھوسہ اور بشری بی بی کے درمیان لیک ہونے والی آڈیو پر لطیف کھوسہ نے سخت ردعمل دیا ہے ۔

لطیف کھوسہ نے کہا کہ یہ آڈیو ایک وکیل اور کلائنٹ کے درمیان ہوئی تھی اس کو جس نے بھی لیک کیا ہے ان لوگوں کو شرم آنی چاہیے ۔

لطیف کھوسہ نےکہا کہ جسٹس بابر ستار نے بھی اس پر سوال اٹھایا کہ اس طرح کی آڈیو کالز کون لیک کرتاہے شرم آنی چاہیے ۔

لطیف کھوسہ نے کہا کہ جسٹس بابر ستار صاحب نے کہا کہ آئیں اس کا جواب جمع کرائیں کہ اس طرح کی آڈیو کون لیک کرتا ہے اور کیوں ان کو سزا نہیں دی جاتی اس کے پیچھے کون ہے ۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

جنگی معاہدوں کے تحت اسرائیل نے مزید 30 فلسطینی رہا کر دیے

اسرائیلی چھاپوں کے دوران بچوں سمیت چھ افراد زخمی ہوگئے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

جنگی معاہدوں کے تحت اسرائیل نے مزید 30 فلسطینی رہا کر دیے

اسرائیل اور حماس کے درمیان جنگ بندی میں دو دن کی توسیع کے بعد آج تیس فلسطینی خواتین اور بچوں کواسرائیلی جیلوں سے رہا کردیاگیا ۔

ادھر اسرائیلی فوج نے جینن اوراس کے پناہ گزین کیمپوں پرچھاپے مارکر گھروں اوردیگر عمارتوں کوتباہ کردیا ہے اور تقریباً بیس فلسطینیوں کو گرفتارکرلیا ہے ۔

اسرائیلی چھاپوں کے دوران بچوں سمیت چھ افراد زخمی ہوگئے ۔

گزشتہ ماہ کی سات تاریخ سے جاری جنگ میں غزہ میں پندرہ ہزار خواتین اور بچے جبکہ دو سو چالیس سے زائد مغربی کنارے میں شہید ہوگئے ۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll