جی این این سوشل

تفریح

نامور قوال عزیز میاں کو دنیا سے رخصت ہوئے 23 برس بیت گئے

شرابی میں شرابی سمیت سینکڑوں قوالیاں گا کر شہرت کی بلندیوں کو چھوا

پر شائع ہوا

کی طرف سے

نامور قوال عزیز میاں کو دنیا سے رخصت ہوئے 23 برس بیت گئے
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

لاہور: رومانوی اور صوفیانہ کلام کو مخصوص انداز میں گا کر امر کرنے والے عزیز میاں قوال کو دنیا سے رخصت ہوئے 23 برس بیت گئے۔

ملک کے نامور قوال عزیز میاں 17 اپریل 1942ء کو پیدا ہوئے، انہوں نے پنجاب یونیورسٹی لاہور سے ایم اے کی ڈگری حاصل کی اور قوالی کے شعبہ کا چناؤ کیا، عزیز میاں قوال نے اللہ ہی جانے کون بشر ہے، تیری صورت، شرابی میں شرابی سمیت سینکڑوں قوالیاں گا کر شہرت کی بلندیوں کو چھوا، انہیں یہ اعزاز بھی حاصل تھا کہ انہوں نے اپنی گائی گئی زیادہ تر قوالیوں کی شاعری خود تخلیق کی۔

اپنے منفرد، بھاری بھر کم اور بارعب انداز گائیکی کے باعث عزیز میاں پاکستان سمیت دنیا بھر کے کئی دیگر ممالک میں انتہائی عزت و احترام کی نگاہ سے دیکھے جاتے تھے، ان کی خدمات کے اعتراف میں حکومت پاکستان نے انہیں 1989ء میں پرائیڈ آف پرفارمنس سے نوازا، عزیز میاں 6 دسمبر 2000ء کو 58 برس کی عمر میں مختصر علالت کے بعد خالق حقیقی سے جا ملے۔

پاکستان

وزیر اعلی پنجاب مریم نواز کی  یونیورسٹی آف لندن کی پرو وائس چانسلرسے ملاقات

وزیراعلی پنجاب مریم نواز نے معیار ی تعلیم، اساتذہ کی تربیت اور عالمی سطح پر وظائف فراہم کرنے پر  ان کی کوششوں کو سراہا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

وزیر اعلی پنجاب مریم نواز کی  یونیورسٹی آف لندن کی پرو وائس چانسلرسے ملاقات

بین الاقوامی درس و تدریس کے بارے میں  یونیورسٹی آف لندن کی پرو وائس چانسلر پروفیسر میری سٹیسنی  نے آج لاہور میں پنجاب کی وزیر اعلیٰ مریم نواز سے ملاقات کی۔

وزیراعلی پنجاب مریم نواز نے معیار ی تعلیم، اساتذہ کی تربیت اور عالمی سطح پر وظائف فراہم کرنے پر  ان کی کوششوں کو سراہا ۔

 انہوں نے پرو وائس چانسلر کو پنجاب میں تعلیم کے فروغ اور اساتذہ کی تربیت کے بارے میں بھی اپنے منصوبوں سے آگاہ کیا ، وزیر اعلیٰ نے کہا کہ وہ نصاب تعلیم کو انفارمیشن ٹیکنالوجی کی بنیاد پر جدید خطوط پر استوار کرنا چاہتی ہیں۔

 

مریم نواز نے اساتذ ہ کے لئے آن لائن تربیتی کورسز شروع کرنے پر بھی پروفیسر میری سٹیسنی سے تبادلہ خیال کیا  اورمعیاری تعلیم کی فراہمی اور ہر بچے کو ہنر سکھانے کے عزم کا اظہار کیا۔

 اس موقع پر پروفیسر میری سٹیسنی نے پنجاب کی پہلی خاتون وزیر اعلیٰ منتخب ہونے پر  مریم نواز کو مبارکباد دی اور تعلیم کےلئے  ان کے جذبے کی تعریف کی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

بلوچ طلباء بازیابی کیس ، انوار الحق کاکڑ اسلام آباد ہائیکورٹ پیش

 نگران وزیر اعظم انوارلحق کاکڑ نے کہا کہ سیاسی جماعتوں کو اس مسئلے کے حل کے لئے مل کر کام کرنا چاہیے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بلوچ طلباء بازیابی کیس ، انوار الحق کاکڑ اسلام آباد ہائیکورٹ پیش

نگران وزیر اعظم انوارالحق کاکڑ بلوچ طلباء مقدمے کی سماعت کےلئے آج اسلام آباد ہائیکورٹ میں پیش ہوئے۔

جسٹس محسن اختر کیانی  پر مشتمل ہائیکورٹ کے ایک رکنی بنچ نے مقدمے کی سماعت کی  ،  نگران وزیر اعظم نے عدالتی کٹہرے میں کھڑے ہوکر کہا کہ ہم آئین وقانون کے پابند ہیں ، انہوں نے کہا کہ ہم قانون کی بالا دستی پر یقین رکھتے ہیں ۔ 

 انہوں نے کہا کہ  لاپتہ  افراد کی بازیابی کےلئے ایک کمیشن تشکیل دیاگیا ہے ، انہوں نے کہا کہ کمیشن لاپتہ ہونے والے بلوچوں کے بار ے میں تحقیق کرے گا اور قانون کے مطابق فیصلہ کریں گے ۔ 

 نگران وزیر اعظم انوارلحق کاکڑ نے کہا کہ سیاسی جماعتوں کو اس مسئلے کے حل کے لئے مل کر کام کرنا چاہیے۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

علاقائی

پنجاب اسمبلی نے 358 ارب روپے کا بجٹ منظور کر لیا

مریم اورنگزیب کی جانب سےبجٹ پیش کیا گیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

پنجاب اسمبلی نے 358 ارب روپے کا بجٹ منظور کر لیا

نجاب اسمبلی نے حکومت کی جانب سے پیش کردہ 358ارب روپے کا ایک ماہ کا بجٹ منظور کرلیا، رقم 31 مارچ تک سرکاری اخراجات کی ادائیگی کےلئے خرچ ہو گی۔

سپیکر پنجاب اسمبلی ملک احمد خان نے اجلاس کی صدارت کی ۔مریم اورنگزیب کی جانب سے ایک ماہ کیلئے 358 ارب سے زائد کا بجٹ پیش کیا گیاتھا۔

سپیکر ملک احمد خان نے کہا کہ اسمبلی کےرولز 104 کے تحت تخمینہ کی تحریک پر کارروائی کا آغاز کیا جائے۔ اگر اپوزیشن کو اعتراض ہے وہ بات کر سکتے ہیں۔ اگر اپوزیشن تحریک پر ووٹنگ کرنا چاہتی ہے تو کروا لیں۔جن کو فلور دیا وہ بات کریں گا۔آرٹیکل 125 کے تحت موجودہ صورتحال پر اسمبلی تحریک پیش کرسکتی ہے۔

سنی اتحاد کونسل کےرانا آفتاب کا ایوان میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہنا تھاکہ جناب سپیکر 358 ارب سے زائد کے بجٹ کی ضرورت کیوں ہے۔ضمنی بجٹ پر بحث ہونا ضروری ہے۔جو بجٹ منظوری کیلئے  پیش کیا جائے گا اس کی تفصیلات فراہم نہیں کی گئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ بجٹ کن کن محکموں کو جاری ہوا اس کی تفصیلات نہیں ہے۔جناب سپیکر اتنا ییسہ تنخواہوں کی مد میں جارہا ہمیں معلوم ہونا چاہئیے۔جناب سپیکر بجٹ پیش کون کرسکتا ہے۔میرا اعتراض ہے معزز رکن بجٹ پیش نہیں کر سکتی ۔فنانس منسٹر یا وزیر اعلیٰ ایوان میں بجٹ کی تحریک پیش کرسکتا ہے۔

بعدازاں پنجاب اسمبلی کا اجلاس غیر معینہ مدت کیلئے ملتوی کردیا گیا۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll