جی این این سوشل

علاقائی

لاڑکانہ:  تالاب میں نہاتے تین بہن  بھائی ڈوب کر جاں بحق 

لاڑکانہ: سندھ کے ضلع لاڑکانہ میں پانی کے تالاب میں نہاتے ہوئے بھائی بہن سمیت تین بچے ڈوب کر جاں بحق ہوگئے ۔ 

پر شائع ہوا

کی طرف سے

لاڑکانہ:  تالاب میں نہاتے تین  بہن   بھائی ڈوب کر جاں بحق 
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

جی این این کے مطابق افسوس ناک واقعہ تحصیل ڈوکری کے نواحی گاؤں بہاول خان جت میں  پیش آیا جہاں تالاب میں نہاتے ہوئے بچے ڈوب  گئے ۔  

علاقہ مکینوں نے اپنی مدد آپ کے تحت بچوں کی نعشیں پانی کے تالاب سے نکال کر تعلقہ اسپتال ڈوکری منتقل کردیں ۔ 

جاں بحق  ہونے والے  بچوں میں 5 سالہ مزمل،  6 سالہ عالیہ اور 4 سالہ غلام رسول شامل  ہیں ۔

پاکستان

انصاف کی فراہمی کیلئے جدید ٹیکنالوجی سے استفادہ کریں گے، چیف جسٹس عمرعطا بندیال

اسلام آباد : چیف جسٹس سپریم کورٹ عمر عطا بندیال نے کہا ہے کہ عدالتوں میں ویڈیو لنک متعارف کرانے سے مالی بوجھ کم ہوا، جدید ٹیکنالوجی سے مزید استفادہ کریں گے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

انصاف کی فراہمی کیلئے جدید ٹیکنالوجی سے استفادہ کریں گے، چیف جسٹس عمرعطا بندیال

ان خیالات کا اظہار انہوں نے سپریم کورٹ اسلام آباد میں 9 ویں 2روزہ انٹرنیشنل جوڈیشل کانفرنس کے اختتامی سیشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ 
انہوں نے کہا کہ کانفرنس کے کامیاب انعقاد پر منتظمین کی کاوشیں لائق تحسین ہیں، انٹرنیشنل جوڈیشل کانفرنس سے بہت کچھ سیکھنے کو ملا۔

چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ کانفرنس میں انصاف کے نظام کو درپیش چیلنجز اور اس کے حل پر تفصیلی بات کی گئی، جوڈیشل کانفرنس میں مندوبین کی شرکت کو سراہتے ہیں۔

جسٹس عمرعطا بندیال نے کہا کہ پاکستانی عدلیہ میں ویڈیو لنک متعارف کرانے سے ادارے پر مالی بوجھ کم ہوا، گزشتہ7ماہ میں ویڈیو لنک کے ذریعے3ہزار391معاملات دیکھے گئے۔

انہوں نے کہا کہ شرکا کی تجاویز اورآرا بہت اہمیت کی حامل ہیں، پوری کوشش کررہے ہیں کہ آئندہ بھی جدید ترین ٹیکنالوجی سے بھرپور استفادہ کریں۔،

چیف جسٹس آف پاکستان کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان میں بڑھتی ہوئی آبادی اور موسمی تغیرات کو بھی دیکھنا ہوگا، عوام کو انصاف کی بلا امتیاز فراہمی سے ہی معاشرتی مساوات کا حصول ممکن ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

جرم

اسلام آباد : ڈائریکٹر سیف سٹی کی پھندا لگی لاش برآمد ، آئی جی کا نوٹس 

اسلام آباد : اسلام آباد پولیس میں گریڈ 19 کے افسر اور ڈائریکٹر سیف سٹی عبدالقدیر کی پھندا لگی لاش ملنے کا آئی جی نے نوٹس لیا ہے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اسلام آباد : ڈائریکٹر سیف سٹی کی پھندا لگی لاش برآمد ، آئی جی کا نوٹس 

جی این این کے مطابق اسلام آباد پولیس کی جانب سے جاری کیے گئے بیان کے مطابق تھانہ کھنہ کے علاقہ میں ڈائریکٹر سسٹم سیف سٹی کی پھندا لگی لاش برآمد کی گئی ،  عبدالقدیر این ٹی سی  کے  ملازم تھے اورڈیپوٹیشن پر اسلام آباد پولیس میں خدمات سرانجام دے رہے تھے، مزید جو بھی حقائق سامنے آئیں گے وہ شیئر کیے جائیں گے۔ 

اسلام آباد پولیس کے سربراہ نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی آئی جی آپریشنز کو کیس کی ہر پہلو سے شفاف تحقیقات کرنے کے احکامات جاری کیے ہیں۔

 

اسلام آباد پولیس نے بیان میں لواحقین سے  ہمدردی کا اظہار کیا ہے ۔ پولیس کی جانب سے  واقعے کی تحقیقات کی جا رہی ہے۔ ابتدائی بیان میں کہا گیا کہ واقعہ خودکشی کا لگتا ہے  ۔  سینیئر پولیس افسران اور فرانزک ٹیموں نے موقع پر پہنچ کر شواہد اکٹھے کیے اور لاش کو پوسٹ مارٹم کے لیے ہسپتال منتقل کردیا گیاہے ۔ 

واضح  رہے کہ اسلام آباد میں سیف سٹی سسٹم کے تحت سینکڑوں کیمرے شہر کی سڑکوں اور پرہجوم جہگوں پر نصب ہیں جن سے مانیٹرنگ کی جاتی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

اٹلی کے خوبصورت جزیرے پر مفت رہائش، خوشخبری آگئی 

اگر آپ نے کبھی یورپی ملک اٹلی میں رہنے کا خواب دیکھا ہے تو آپ کی خواہش اب  پوری ہونے والی ہے ، سونے پر سہاگہ یہ کہ آپ کو اٹلی جانے کے لیے معاوضہ بھی  مل سکتا ہے ۔ 

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اٹلی کے خوبصورت جزیرے پر مفت  رہائش، خوشخبری آگئی 

 بحیرہ روم کے دوسرے بڑے جزیرے سارڈینیا  کی جانب سے  لوگوں کو حیرت انگیز پیشکش  دی  گئی ہے ، سارڈینیا ، جزیرے پر آ کر بسنے والے افراد کو 15 ہزار یورو (35 لاکھ پاکستانی روپے سے زائد) فی کس دینے کی منصوبہ بندی کررہا ہے ۔

اگرچہ یہ تصور کرنا  ذرا مشکل ہے کہ اتنی خوبصورت جگہ پر منتقل ہونے کے لیے جزیرے کی جانب سے  لوگوں کو ادائیگی کرنے کی ضرورت ہوگی، لیکن سارڈینیا کی حکومت اس کیلئے خاصی سنجیدہ ہے کیونکہ  اس کا مقصد آبادی کی کمی  کا مقابلہ کرنے کے لیے نئے رہائشیوں کو ترغیب دینا  ہے۔

 سارڈینیا کی حکومت نے کروڑوں یورو کی رقم مختص کی ہے جو ہزاروں افراد کو دینے کے لیے کافی ہے۔سارڈینیا کو اٹلی نے علاقائی خود مختاری دی ہوئی ہے اور وہاں کے رہائشی اپنا صدر خود منتخب کرتے ہیں۔

سارڈینیا کے صدر کا اس حوالے سے  کہنا ہے کہ آبادی میں اضافے کے بغیر معاشی ترقی کا خواب ممکن نہیں اور اسی کو مدنظر رکھتے ہوئے نئی پالیسیوں پر کام کیا جارہا ہے۔

اس پروگرام میں دلچسپی رکھنے والے افراد کو سارڈینیا کے کسی ایسے قصبے میں قیام کرنا ہوگا جہاں کی آبادی 3 ہزار سے کم ہوگی اور انہیں جو رقم دی جائے گی وہ گھر کی تزئین و آرائش پر خرچ کی جائے گی اور انہیں اس قصبے میں وہاں کل وقتی قیام کرنا ہوگا،

اسی طرح 18 ماہ کے اندر اس فرد کو سارڈینیا کو اپنے مستقل پتے کے طور پر رجسٹر کروانا ہوگا۔ حکام کو توقع ہے کہ لوگ وہاں آسانی سے رہائش اختیار کرنے کے لیے تیار ہوجائیں گے۔

اگر آپ بھی خوبصورت جزیرے پر زندگی گزارنے  کی  خواہش رکھتے ہیں تو یہ پیشکش آپ ہی کے لیے ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll